“أستغفر الله العظيم “


کس رانے نے کیا کہا ہے یا کس کتے نے کونسا کام کرنے کا کویؑ نیا ڈرامہ کیا ہے میں یہ سب تفصیلیں
نہیں لکھونگا کہ اب اس کی ضرورت نہیں ہے میڈیا میں سب کچھ سب لوگ دیکھ سن چکے ہیں
جب سے یہ خبر دیکھنے اور سننے میں آیؑ تب سے دل ہے کہ حلق میں اٹک کر رہ گیا ہے
ہاےؑ ہاےؑ ہاےؑ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔


کچھ سمجھ میں ہی نہیں آ رہا کہ کیا کیا جاےؑ ، لیکن اپنا ہی دم گھٹتا دیکھ کر قلم کا سہارا لینا
پڑا ہے ، جیسا کہ آپ سب جانتے ہیں کہ میں نہ تو کویؑ بڑا لکھاری ہوں اور نہ ہی کویؑ شاعر
میں تو فقط اپنے احساسات کو لفظوں میں ڈھالنے کی ناکام سی کوشش کرتا رہتا ہوں ،
اس واقعے سے پہلے بھی بہت سارے واقعات گزر چکے ہیں جب بھی کویؑ واقعہ ہو جاتا ہے
لوگ اس پر ہر جگہ ہر طبقے میں باتیں کرتے ہیں اور پھر سب کچھ آہستہ آہستہ بھول جاتے ہیں
یہ بھول جانا ہی سب سے بڑی غلطی ہے ایک کے بعد ایک واقعہ ہوتا رہا ہے اور لوگ
یا شیخ اپنی اپنی دیکھ کے طور پر خاموش تماشایؑ کی حد تک رہ جاتے ہیں یہ ہی بہت سنگین
غلطی ہے جس کی بنا پر درندگی حد سے گزر چکی ہے ، جب ایک بارحکومت کی بے غیرتی
کا پول کھل گیا تھا تو اب تک اس کو بدلنے کا بندو بست کیوں نہیں کیا گیا ؟
اگر کسی پہلے واقعے پر ہی حکومت کا تختہ الٹ جاتا تو اب ایسے واقعات دوبارہ جنم نہ لیتے
کہ پاک ستان کے لفظی معانی پاک زمین کے ہیں اوراس پاک زمین میں کونسا گندا کام ابھی باقی
بچا ہے جو نہیں کیا گیا ؟ میں یہاں وہ سب بلکل بھی نہیں لکھ سکتا کہ جس کی طرف دیہان جانے سے
میرا خود کا دل پھٹنے پر چلا جاتا ہے لیکن میں بزات خود اتنا ہی عرض کر دینا چاہتا ہوں کہ
ہم سب کے گھروں میں بھی معصوم بچے ہیں ان کی طرف دیکھیں ایسا تو کسی کے ساتھ بھی ہو سکتا ہے
جن کے ساتھ یہ سب ہوا ہے زرا ان کے دل سے جا کر پوچھےؑ ان کے دل پر کیا گزر رہی ہے؟
اس لےؑ خدارا بات کو سمجھےؑ اور ایک جان اور ایک آواز ہو جایؑں اور ان کتوں سے اپنے آپ کو ، اپنے بچّؤں کو اور اپنے ملک کو ہر حال میں بچایؑں !

ہر نفس شیطان کا پجاری بے ضمیر ہو چکا ہے یہاں
تا حد نظر کویؑ نہیں جو ایماندار و صاحب ضمیر نظر آےؑ

ہیں ظالم لوگ وہ جن کے کان پر جوں تک نہیں رینگی
لٹے جنت کے دروازے دیکھ کر جو بے ضمیر نظر آےؑ

کتنی کلیاں مسل دی گیؑں لیکن ان کتوں کو حیا نہیں
کس قدر سفاکی چھایؑ ہے کہ سب مردہ ضمیر نظر آےؑ

اس جہاں کے بے غیرت ترین حکمران ہیں یہ
جو بیٹی پر بھی سیاست چمکا کر روشن ضمیر نظر آےؑ

ارے میں کچھ بھی نہیں کہتا مگر سچ کیسے چھپے گا
بد بخت ہیں جن کو عزت کا سودا بھی زر ضمیر نطر آےؑ

آلودہ ناک ہیں ظالم اسمبلی میں بیٹھے حرامی لوگ
جن کے منہ سے ان کا حسب نسب مردہ ضمیر نظر آےؑ

بے حس بے شرم اور بے غیرت ہیں اس قدر
مجال ہے کردار پہ ان کے جو تبصرہ ضمیہر نظر آےؑ

یا ربُّ العالمین میں تسلیم کرتا ہوں کہ میں گناہگار ہوں ، خطا کار ہوں لیکن اے پرور دگار عالم
میں جانتا ہوں میرے گناہ آپکی رحمتوں سے زیادہ نہیں ہیں ، دلوں کے حال تو آپ زیادہ جانتے ہیں
یا اللہ پاک اپنے پیارے محبوب پاک سرور کونین فخر موجودات محمد صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم
کی محبتوں کا صدقہ اور آپ محمد صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم کی آل پاک علیہ السلام کی عظمت و شان اقدس کا صدقہ میرے گناہ بخش دیں ،
یا اللہ پاک آپ جانتے ہیں میں بے غیرت نہیں ہوں نہ ہی کسی بے غیرت کا ساتھی ہوں پھر مجھے ایسا دیکھنا کیوں پڑ رہا ہے یا پروردگار عالم بچّوں کو تو آپنے خود معصوم فرمایا ہے وہ معصوم ہوتے ہیں
انہوں نے کسی کا کیا بگاڑا ہے کہ ان کے ساتھ ایک کے بعد ایک کرکے کیسا کیسا ظلم ہو رہا ہے
یا اللہ پاک وہ مؑصوم بچہّ جس نے کربلا میں پانی مانگا تھا اور ظالم نے اس کے گلے میں تیر مارا تھا
وہ سب بھی مجھے یاد کرا دیا گیا ہے یہاں بھی اسی ظالم لعین کی اولادیں معصوم بچوّں پر ظلم کر رہی ہیں
“أستغفر الله العظيم الذي لا إله إلا هو الحي القيوم و أتوب إليه”
یا اللہ مجھ میں تو دیکھنے اور سننے کی بھی سکت نہیں ہے تو میں روک کیسے سکتا ہوں مجھے وہ ہمت
عطا فرما دیں کہ میں ایک ایک کو چن چن کر جہنم رسید کر سکوں یا پھر میرے معصوموں کا بدلہ
خود لے کر دکھا دیں کہ آپ سب کچھ دکھانا خوب جانتے ہیں ،
یا ربُّ العالمیں تمام امت مسلمہ کے بچےّ میرے ہی تو بچےّ ہیں ان سب کی حفاظت خود فرمایؑں ان سب
کو اپنی امان میں رکھیں یا اللہ پاک جن ظالموں نے میرے معصوموں پر ظلم کےؑ ہیں ان سب کو اور ان کے ساتھیوں کو اور ان کے ساتھ نرمی برتنے والے بے غیرتوں تک کو عبرت کا نشان بنا دیں ایسا نشان کہ آنے والی نسلیں بھی جن پر لعنت کرتی جایؑں ،
یا جبّار و غفّار و قہار میرے سرکار رحمۃ اللہ علیہ کی دعاؤں اور محبتوں کا صدقہ میری اس دعا کو قبول و منظور فرمایؑں ،
آمین ثُم آمین

 

Poetry

 

 

Advertisements

2 thoughts on ““أستغفر الله العظيم “

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: