حال نہ پوچھو دوستو

دل کا دکھ جانا اس پہ ہنس دینا فطرت رہی اپنی
حال نہ پوچھو دوستو بس شراب پی رہا ہوں میں

Advertisements

Leave a Reply