” جانتا ہوں آدمی نیؑ پتھر ہے “

 

 

جانتا ہوں آدمی نیؑ پتھر ہے نہیں کرتا محبت نا کرے

جدایؑ بھی تو ایک سانحہ ہے اس دل سے ہجرت نا کرے

 

 

 

 

Leave a Reply