بصد افسوس

 

بصد افسوس
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ریاکاری صاف دیکھ کر بھی ہم نہیں کچھ بولنے والے ہیں
شفقت بھری زبان سے رفو کرنے والے ہیں

سیکھنے کو جن سے ملتا ہےانکی قدر کرنے والے ہیں
غیبت ،نفرت یا حسد والے سے ہم پیار کرنے والے ہیں

زمانے کی ستم ظریفی یا ہے ریا کاری تم ہی بتاؤ؟ یارو
بہت محبت ہے ؟ دعا کہی جن کو ، وہ نایؑس کرنے والے ہیں

مظہر اقبال گوندل

 

Poetry

 

 

Leave a Reply